پتہ کرو سی آئی ڈی کیوں بند ہوا، کچھ تو گڑبڑ ہے!

 

 

اے سی پی پردیومن اب ہر تفتیش کی ابتدا سے قبل ‘کچھ تو گڑبڑ ہے دَیا’ بولتے نظر نہیں آئیں گے اور نہ ہی دَیا دروازہ توڑتے ہوئے نظر آئيں گے۔ کیونکہ سونی ٹی وی چینل کا شو ‘سی آئی ڈی’ 21 سال چلنے کے بعد روک دیا گیا ہے۔

سنہ 1997 میں پہلی بار نشر ہونے والے اس سیریز سے قبل ٹی وی پر کئی کرائم شو آئے لیکن دیکھتے ہی دیکھتے بی پی سنگھ کی ہدایت میں بننے والا ٹی وی شو ‘سی آئی ڈی’ اپنے وقت کا سب سے مقبول کرائم شو بن گیا۔

لیکن 21 سال بعد اسے کیوں بند کر دیا گیا؟ اب اس معاملے کی تحقیقات کون کرے گا؟ کچھ تو گڑبڑ ہے دَیا!
چلیے اے سی پی پرادیومن کا کردار اپناتے ہوئے ہم یہ جاننے کی کوشش کرتے ہیں کہ اس شو کے ساتھ کیا ‘گڑبڑ’ ہوئی۔
اس شو میں سینیئر انسپکٹر دَیا کا کردار ادا کرنے والے دیانند شیٹی نے بی بی سی سے بات چیت میں بتایا کہ اس شو کے بند کرانے کے پس پشت کون ہیں۔
اگر چہ شو کے پروڈیوسرز نے سی آئی ڈی کے بند ہونے کا اعلان اب کیا لیکن دَیانند کے مطابق دو سال سے اسے بند کرنے کی بات گشت کر رہی تھی۔
انھوں نے کہا کہ سونی چینل اس شو کو بند کرنے کے لیے دو سال سے کوشاں تھا لیکن وہ چاہتا تھا کہ پروڈیوسرز خود ہی اسے بند کردیں اور ان کے سر اسے بند کرنے کا الزام نہیں آئے۔

 

 

انھوں نے کہا: ‘ہمارا شو جمعہ، سنیچر اور اتوار کو نشر ہوتا تھا۔ پہلے سونی نے اسے جمعے کو نشر کرنا بند کیا اور پھر کبھی سنیچر کو اس کی نشریات بند کر دیتے تو کبھی اتوار کو۔’
اس کے لیے وہ ٹی آر پی کا حوالہ دیتے کہ اسے کم لوگ دیکھ رہے ہیں لیکن دیانند کے مطابق سونی کے دوسرے شوز کے مقابلے میں اس شو کا حال ٹھیک تھا اور یہ اچھی کارکردگی کا مظاہرہ کر رہا تھا۔
انھوں نے کہا: ‘لیکن چینل نے یہ طے کر لیا تھا کہ شو اب پرانا ہو چکا ہے اور اسے بند کر دینا چاہیے۔ جبکہ آج بھی چھوٹے بچے اس شو کو دیکھتے ہیں۔’
جب شو بند ہونے کی خبر آئي تو لوگوں نے سوشل میڈیا پر اپنے تاثرات شیئر کیے۔
لوگوں نے سیو سی آئی ڈی کے ہیش ٹیگ کے ساتھ اپنے اس کے بند کرنے کے خلاف مہم میں شرکت کی۔

 

دیانند شیٹی نے بچوں کو شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا: ‘اس شو کو ابتدا سے ہی بچوں نے پسند کیا اور اب بھی وہ اسے پسند کرتے ہیں۔ انھوں نے ہی اس شو کو جلا بخشی۔’
انھوں نے بتایا کہ اس کے پڑوسی میں رہنے والے ایک سات سالہ بچہ اس شو سے اس قدر منسلک تھا کہ اس نے یو ٹیوب سے تلاش کرکے سی آئی ڈی کے پرانے ایپیسوڈ دیھکے۔
لیکن بچوں میں مقبول یہ سیریئل 21 سال کا ہو گیا تھا اور چینل والوں کو پرانا لگنے لگا تھا۔
دَیانند شیٹی کہتے ہیں کہ اس شو کے بند ہونے کے بعد وہ سب سے زیادہ اس کے سیٹ پر سب کے ساتھ مل بیٹھ کر کھانا کھانے کو بہت مس کریں گے۔
وہ ‘سی آئی ڈی’ کو ایک بہت بڑا خاندان کہتے ہیں اور امید کرتے ہیں کہ شو کے بند ہونے کے بعد بھی یہ سب اسی طرح جڑے رہیں گے۔
جب ان سے پوچھا گیا تھا کہ ‘سی آئی ڈی ریٹرنز’ کی کوئی امید ہے تو انھوں نے ناامیدی ظاہر کی اور کہا کہ اگر سی آئی ڈی واپس آتا ہے تو سونی پر نہیں آئے گا۔ شاید کسی دوسرے نام سے، مختلف انداز میں ویب سیریز کے طرز پر آ سکتا ہے لیکن ابھی قطعی طور پر کچھ نہیں کہا جا سکتا۔

تاہم انھوں نے بتایا کہ تخلیقی ٹیم اور شو کے پروڈیوسرز کے درمیان بات چل رہی ہے۔